مرکزی صفحہ » امتحانات

امتحانات

امتحانی نظم ونسق اور شرائط داخلہ

اتحاد المدارس العربیہ پاکستان کی مجلس منتظمہ اور امتحانی کمیٹی نے امتحانی طریقہ کار کے حوالے سے جن شرائط وضوابط کی منظوری دی وہ درج

ذیل ہیں۔

  1. امیدوار کیلئے اہل سنت والجماعت کے عقائد کا پابند ہونا ضروری ہے۔
  2. درجہ عالمیہ کے چھ پرچے ہوں گے جس کیلئے کسی دینی بورڈ سے درجہ عالیہ یا اس کے مساوی ڈگری کا ہونا ضروری ہے۔
  3. درجہ عالیہ، خاصہ اور عامہ کیلئے کسی دینی بورڈ سے مطلوبہ تحتانی سند یا اس کے مساوی سند کا ہونا ضروری ہے۔ نیز ان مذکورہ درجات کے چھ چھ پرچے ہوں گے۔
  4. عصری اداروں کے  اسلامیات ،عربی، تھیالوجی میں بی۔اے آنر  یا ماسٹر کرنے والے طلباء کو جو کہ کم از کم سیکنڈ ڈویژن میں پاس کیا ہو ان کو عالمیہ میں داخلہ دیا جائے گا۔ اسی طرح مڈل، میٹرک اور ایف اے پاس طلباء بھی بالترتیب درجہ عامہ، خاصہ اور عالیہ کے امتحانات میں شرکت کے مجاز ہیں۔
  5. تحتانی درجات کے امتحانات میں وہ طلباء بھی شرکت کرسکتے ہیں جن کے فارم کے ساتھ دینی ادارے کے مہتمم یا ناظم تعلیمات کی طرف سے ادارے کے لیٹر پیڈ پر مصدقہ بیان لف ہو۔
  6. امیداور کیلئے باشرع ہونا یعنی داڑھی کا سنت کے مطابق ہوناضروری ہے۔ ’’مقطوع اللحیہ یا قصر اللحیہ  (داڑھی کْتر وانا)‘‘  ہونے کی صورت میںامتحان میں شمولیت کی اجازت ہرگز نہیں ہوگی۔
  7. ہر درجہ میں داخلہ کیلئے چار عد د  رنگین تصاویر اور شناختی کارڈ کا ہونا ضروری ہے۔ خواتین تصاویر سے مستثنیٰ ہیں۔
  8. امیدوار کو چاہئے کہ وہ اپنا داخلہ فارم صوبائی ناظم یا ادارے کے مہتمم کو مقررہ امتحانی تاریخ کے اندر اندر پہنچائیں۔
  9. درجہ حفظ کیلئے مکمل قرآن کا یاد ہونا ضروری ہے اور درجہ تجوید کیلئے جملہ قواعد تجوید سے آگاہی لازمی ہے۔